Top Panel
You are here: HomeNewsجموں کے شرنارتھیوں کی وکالت کرنا قوم دشمنی اور ایمان فروشی کے مترادف// جماعت اسلامی
Monday, 02 February 2015 00:00

جموں کے شرنارتھیوں کی وکالت کرنا قوم دشمنی اور ایمان فروشی کے مترادف// جماعت اسلامی

Rate this item
(1 Vote)

۲؍فروری۵۱۰۲

سرینگر//جموں میں مغربی پاکستان سے۷۴۹۱ء ؁ میں تقسیم ملک کے وقت بھاگ کر آئے ہوئے شرنارتھیوں کو یہاں مستقل سکونت دینے کی وکالت کرنا جموں و کشمیر کے اس متنازعہ خطے کی اسلامی شناخت مٹانے کی حمایت کرنے کے مترادف ہے جو نہ صرف ملت اسلامیہ کے مفادات کو زک پہنچانے کی مذموم کارروائی ہے بلکہ ایمان فروشی کی ایک واضح علامت بھی ہے۔ اس میں کوئی شک نہیں کہ اسلام انسانیت کے تحفظ اور انسانی حقوق کی پاسداری کا واحد علمبردار نظام حیات ہے مگر انسانیت کی آڑ میں ایک مظلوم قوم کے مستقبل کو داؤ پر لگانے کی خاطر، اسلام کا نام لینا سب سے بڑی اسلام دشمنی ہے اور اس کو ایک ابلیسی حربے کے سوا کچھ اور نام نہیں دیا جاسکتا۔ اسلامی ہمیں حق وباطل میں فرق کرنے کی تمیز عطاکرکے، مظلوم کی حمایت اور ظالم کے ہاتھ روکنے کی تعلیم دیتا ہے نہ کہ مظلوم کے حقوق دبانے کی خاطر،انسانیت لفظ کے غلط استعمال کی اجازت فراہم کرتا ہے۔

ایسا کہنے والا یا تو اسلام کے بنیادی اصولوں اور اس کی تعلیمات سے بالکل بے بہرہ ہے یا جان بوجھ کر ظالم کی رضامندی کی خاطر، اسلام کی ایسی تعبیر کرتا ہے جو حقیقت کے بالکل منافی ہے۔ اگر ایسے فرد کو انسانیت کی اتنی ہی درد ہے تو اُس کو جموں و کشمیر میں بسنے والے لاکھوں مظلوم اور بے بس لوگوں کے اُن حقوق کی بازیافت کے لیے آواز بلند کرنی چاہئے جن کو طاقت کی بنیاد پر ان حقوق سے ایک سوچی سجھی سازش کے تحت محروم کرکے رکھ دیا گیا ہے اور ان حقوق کی بحالی کی بات کرنے پر بھی انہیں بدترین مظالم کا شکار بنایا جاتا ہے۔ نیز لاکھوں شرنارتھیوں کو یہاں کی مستقل سکونت کی سند عطا کرنے کا واضح مطلب اس ریاست کی مسلم اکثریتی شناخت کو مٹا دینا ہوگاجو کہ ملت اسلامیہ کے لیے خود کشی کے مترادف ہے۔ اپنی قانونی مہارت کا بے جا سہارا لیتے ہوئے، جس طرح ایک فرد، ایک قوم کو خودکشی کی دعوت دیتا ہے اور اس کے لیے انسانیت اور قرآن و سنت کا سہارا لیتا ہے۔ ایسا کرنا نہ صرف انسانیت کی تذلیل ہے بلکہ قرآن و سنت کے ساتھ بھی ایک بے جا کھلواڑ ہے۔
جماعت اسلامی جموں و کشمیر ریاست کے تمام علماء کرام، دانشور حضرت اور غیور عوام کو ان حربوں سے خبردار رہنے کی مخلصانہ اپیل کرتی ہے اور مبینہ فرد کو اقتدار کے ہوس میں ان فریب کاریوں سے باز آنے پر زور دیتی ہے۔ بصورت دیگر ایسے فرد کا نام بھی قوم دشمنوں اور ایمان فروشو ں کی فہرست میں شامل ہوگا۔

Read 468 times

Al'Quraan

The woman and the man guilty of illegal sexual intercourse, flog each of them with a hundred stripes. Let not pity withhold you in their case, in a punishment prescribed by Allah, if you believe in Allah and the Last Day. And let a party of the believers witness their punishment. (This punishment is for unmarried persons guilty of the above crime but if married persons commit it, the punishment is to stone them to death, according to Allah's Law).

Al'Quraan Surah Noor

Prophet Mohammad PBUH

Narrated: Abu Huraira (R.A) that a man said to the Prophet, sallallahu 'alayhi wasallam: "Advise me! "The Prophet (PBUH) said, "Do not become angry and furious." The man asked (the same) again and again, and the Prophet said in each case, "Do not become angry and furious." [Al-Bukhari; Vol. 8 No. 137]

Sunan Abu-Dawud.

eXTReMe Tracker